آج کی اس ویڈیو کا آغاز”اللہ کے با وبرکت نام سے جو بڑا مہربان اور رحم کرنے والا ہے۔ اور جب میں بیمار ہوتا ہوں تو وہی مجھے شفا دیتا ہے۔“ ناظرین آج کی اس ویڈیو میں ہم آپ کو بتائیں گے کہ گردے انسانی جسم میں کیا کام سر انجام دیتے ہیں۔ مگر اس سے پہلے ہم آپ کو بتاتے چلیں کہ اگر آپ کا کوئی بھی روحانی مسئلہ ہے جس کا آپ کو حل نہیں مل رہا تو اسی ویڈیو کی ڈسکرپشن میں دیے گئے فون نمبرز پر رابطہ قائم کریں۔ناظرین جیسا کہ ہم سب جانتے ہیں کہ گردے انسان کے جسم کا سب سے اہم آرگن ہے۔ اور انسانی جسم میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ یہ انسانی جسم میں فلٹر کے طور پر ایکٹ کرتے ہیں اور ہمارے جسم سے تمام نقصان دہاڈوں کو پیشاب کی صورت میں خارج کرتی ہیں۔ گردے انسانی جسم کا اہم وضو ہے۔ دنیا میں ہر سال 50 سے زائد لوگ اس بیماری کا شکار ہوتے ہیں۔ اگر ہم گردے کی شکل کی بات کریں تو یہ لوبیا کی شیپ میں ہوتے ہیں۔ اس کی لمبائی 12 سینٹی میٹر اور چوڑائی چھ سینٹی میٹر ہے۔ گردے کا وزن 150 گرام کے لگ بھگ ہوتا ہے گردے کا اوپر والا حصہ پسلیوں سے ڈھکا ہوتا ہے اور انسان کو کھڑا رکھنے میں ریڑکی ہڈی کے ساتھ ساتھ گردوں کا بھی اہم کردار ہے۔

گردے کے کام


مردے ہمارے جسم کا بیس فیصد خون حاصل کرتے ہیں۔ زندگی ایک مہیائی عمل ہے جو ہر وقت جاری رہتا ہے جس کے نتیجے میں کچھ فاسد او ر نقصان دہ مادے وجود میں آتے ہیں۔گردے ان فاسد مادوں کو جسم سے خارج کرتے ہیں۔ اگر یہ خراب ہو تو ٹھیک طرح سے کام کرنا چھوڑ دیں تو انسانی جس طرح میں دیگر محرومیوں کے ساتھ ساتھ موت واقع ہونے کا بھی خطرہ ہوتا ہے۔ لہذا اس کو شروع کی علامات میں ہی کنٹرول کرنا ضروری ہوتا ہے۔ اس کے بیماری کا سب سے خطرناک پہلو یہ ہے کہ بہت عرصے تک گردوں کی بیماری کی کوئی واضح علامات ظاہر نہیں ہوتی اور نہ ہی کوئی درد وغیرہ محسوس ہوتی ہے۔ گردوں کے امراض کے افراد عام طور پر اس کی علامات کو نظر انداز کر دیتے ہیں اور جب تک توجہ دیتے ہیں۔اس وقت تک جسم کو بہت نقصان پہنچ چکا ہوتا ہے اس لیے اس کے شروع کی علامات کو جاننا انتہائی اہم ہوتا ہے تاکہ اس بیماری کا فوری طور پر علاج ممکن ہو سکے۔

contrect us:
Female: 0305-7891555
For Male; 0303-0114786